Written by 7:26 am Mega Projects, News, Property Laws, Real Estate

سستی ہاوسنگ کے لیے قرضوں کے حصول میں سست روی دیکھی گئی

housing finance not speeding up

وفاقی حکومت اور اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے سستے مکانات بنانے کی ترغیب کے باوجود قرضوں کے حصول میں سست روی دیکھی جا رہی ہے ۔ اسٹیٹ بینک کی جانب سے شائع کردہ رپورٹ کے مطابق کمرشل بینکوں کا خالص ہاؤسنگ فنانس اسٹاک جولائی اور مارچ کے درمیان 9 ماہ کے عرصہ میں محض 13 ارب 70 کروڑ روپے اضافے کے ساتھ 93 ارب 50 کروڑ روپے ہوگیا۔تاہم اس میں بینکوں کے ذریعے اپنے ملازمین کو پیش کیے گئے ہاؤسنگ بلڈنگ قرضوں کو شامل نہیں کیا گیا جس کا اسٹاک اسی عرصے کے دوران 109 ارب 80 کروڑ روپے سے بڑھ کر 134 ارب 80 کروڑ روپے ہوگیا ہے۔مشترکہ طور پر بینکوں کا ہاؤسنگ لون اسٹاک جولائی میں 189 ارب 60 کروڑ سے بڑھ کر 228 ارب 30 کروڑ ہوا جو ملکی معیشت کے حجم کا 0.5 فیصد سے تھوڑا زیادہ ہے۔

(Visited 12 times, 1 visits today)
Close
0 Shares
Share via
Copy link
Powered by Social Snap